شادی پی کے ، اپنا جیون ساتھی خود ڈھونڈیں

حال ہی میں شادی کے بندھن میں بندھنے والے ہانیہ اور سلیم کی ملاقات شادی۔پی کے کے ذریعے ہوئ ۔
ہانیہ نے ہمیں اپنی کهانی سنائ کہ کس طرح وہ شادی ۔پی کے تک پہنچی اور اس سے پہلے اس نے کس طرح کے حالات فیس کیے ۔
ان کے والدین نے تقریبا ۵۰ سے زائد رشتے دیکھے ہوں گے۔
جن میں سے قریباً 40 نے مجھے ریجیکٹ کر دیا ۔
کوئ کہتا تھا میں دیکھنے میں زیادہ عمر کی لگتی ہوں اور کوئ کہتا تھا کہ رنگ کی سانولی ہوں
میرے ساتھ ساتھ میرے والدین بھی اس اذیت سے گزرے ۔
ہانیہ وہ پہلی لڑی نہیں ہے جس کے ساتھ یہ سب ہوا ۔
اس طرح کی ہزاروں لڑکیاں جو روزانہ کتے ہی لوگوں سے ریجیکٹ ہوتی ہیں
لیکن ان تمام لڑکیوں کے برعکس ہانیہ نے تنگ آ کر اپنا رشتہ خود ڈھونڈنے کی کوشش کی۔
پھر اس کو شادی۔پی کےملا اور وہاں سے اس کو اس کا جیون ساتھی ۔
آن لائن شادی۔پی کے نے ہانیہ کی زندگی ہی بدل دی۔

Check Also

اگر طلاق کا حق عورت کے پاس ہوتا تو کیا ہوتا

کچھ لوگ آپ کو یہ کہتے سنائی دیں گے کہ طلاق کا حق عورت کے …